Advertisement

پانی کی پلاسٹک والی بوتل میں دوبارہ پانی بھر کے پینے کا کیا نقصان ہے ؟ جان کر آپ اس کام سے توبہ کر لیں گے

Advertisements

اگر آپ بھی پانی کی استعمال شدہ بوتل میں دوبارہ پانی بھر کر پیتے ہیں تو جان لیجئے کہ یہ عمل آپ کی صحت کیلئے انتہائی مضر ثابت ہو سکتا ہے۔ٹریڈ مل ریویوز میگزین کی جانب سے کئے گئے ٹیسٹ میں ثابت ہوا ہے کہ پانی کی استعمال شدہ بوتل میں جراثیم کی 9 لاکھ کالونیاں ہوتی ہیں جن میں سے 60 فیصد آپ کو انتہئی بیمار بنانے کیلئے کافی ہوتے ہیں۔تحقیق میں ای ہفتے کیلئے چند کھلاڑیوں کی بوتلوں کا معائنہ کیا گیا، جس میں ثابت ہوا کہ ایک بوتل پر ٹوائلیٹ سیٹ سے زیادہ جراثیم موجود ہوتے ہیں۔ڈاکٹر میریلن گلین ول نے بتایا کہ بوتل کے پلاسٹک میں موجود چند کیمیکلز جسم کے ےقریباً ہر حصے کیلئے نقصاندہ ہیں۔ ڈاکٹر میریلن کا کہنا ہے کہ اپنی بوتل کو دوبارہ استعمال نہ کریں،

لیکن اگر ضروری ہوتو کم سے کم اسے گرم پانی سے نہ دھوئیں۔یہ عمل آپ کی صحت کیلئے انتہائی مضر ثابت ہو سکتا ہے۔ پانی کی استعمال شدہ بوتل میں جراثیم کی 9 لاکھ کالونیاں ہوتی ہیں جن میں سے 60 فیصد آپ کو انتہئی بیمار بنانے کیلئے کافی ہوتے ہیں۔تحقیق میں ای ہفتے کیلئے چند کھلاڑیوں کی بوتلوں کا معائنہ کیا گیا، جس میں ثابت ہوا کہ ایک بوتل پر ٹوائلیٹ سیٹ سے زیادہ جراثیم موجود ہوتے ہیں۔ڈاکٹر میریلن گلین ول نے بتایا کہ بوتل کے پلاسٹک میں موجود چند کیمیکلز جسم کے ےقریباً ہر حصے کیلئے نقصاندہ ہیں۔ڈاکٹر میریلن کا کہنا ہے کہ اپنی بوتل کو دوبارہ استعمال نہ کریں، لیکن اگر ضروری ہوتو کم سے کم اسے گرم پانی سے نہ دھوئیں۔

Advertisement

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings