Advertisement

بھارت سے پاکستان داخل ہونے کی کوشش پاکستانی ادارے ایک بار پھر حرکت میں آگئے

Advertisements

کسٹم اینٹی سمگلنگ سکواڈ نے انڈین سمگل شدہ کپڑا اور دیگر سمگل شدہ سامان سے بھرے دو ٹرک پکڑ کے قبضے میں لے لئے۔تفصیلات کے مطابق علی الصبح کلیکٹر کسٹمز احمد ر ؤف کی اطلاع پر کارروائی کرتے ہوئے ڈپٹی کلیکٹر کسٹمز لاہور نویدالرحمن بگوی کی سربراہی میں انڈین سمگل کپڑے اور دیگر سمگل سامان سے لدے دو ٹرک قبضے میں لے لئے جس کی مالیت کروڑوں میں بتائی جارہی ہے۔دونوں ٹرک کشمیرسے جی ٹی روڈ استعمال کرتے ہوئے

گوجرانوالہ کے راستے لاہور آ رہے تھے۔ شاہدرہ کے قریب ایکشن کرتے ہوئے کسٹم اینٹی سمگلنگ نے دھر لئے۔کسٹم سٹاف کو آپریشن کے دوران سمگلرذ کی طرف سے سخت مزاحمت کاسامنا کرنا پڑا۔مقدمہ درج کر کے مزید کاروائی کی جارہی ہے اور ملزمان سہولت کاروں کی گرفتاری کے لئے ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے۔کسٹمز اینٹی سمگلنگ نے سمگلرز کے خلاف بڑے کریک ڈان کا آغاز کر دیا ہے۔

کس کو وفاقی وزیر بنا دیا گیا چونکا دینے والی خبر

پاکستان تحریک انصاف کے ایک اور رہنما اور سینئر ملکی سیاستدان کو وفاقی وزیر بنانے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔ کشمیر کمیٹی کے سربراہ فخر امام کو وفاقی وزیر کا عہدہ دینے کا فیصلہ کر لیا گیا ہے۔فخر امام پاکستان تحریک انصاف کے مرکزی راہنما ہیں اور اس سے پہلے کشمیر کمیٹی کے سربراہ بھی ہیں، اب وزیر اعظم کی کابینہ میں توسیع کی گئی ہے جس میں انہیں وفاقی وزیر بھی بنا دیا گیا ہے۔فخر امام 1985سے 1988تک حزبِ اختلاف کے سربراہ رہے اس کے علاوہ وہ قومی اسمبلی کے گیارہویں سپیکر بھی رہے۔ پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت سے پہلے وہ پاکستان مسم لیگ نواز کا حصہ تھے انکی بیوی سیدہ عابدہ حسین بھی نواز شریف حکومت میں وزیر رہی ہیں۔ سید فخر امام کی صاحبزادی سیدہ صغرہ امام بھی سیاستدان ہیں۔سید فخر امام کو پاکستانی سیاست میں اہم مقام حاصل ہے اور وہ کئی اہم کرسیوں پر براجمان رہے ہیں اب انہیں وزیر اعظم کی ہدایت پر وفاقی وزیر بنا دیا گیا ہے جبکہ وہ کشمیر کمیٹی کے سربراہ بھی ہیں۔

Advertisement

Source DailyAusaf
x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings