Advertisement

مولانا فضل الرحمان حکومت کو گرانے کیلئے پہلے سے زیادہ متحرک ہوگئے، کیا کر نے والے ہیں ؟

Advertisements

مولانا فضل الرحمان نے سابق صدر آصف سے ملاقات کی ہے۔مولانا فضل االرحمان نے اپوزیشن جماعتوں میں تعاون اور مفاہمت پر زوردیا۔تفصیلات کے مطابق اس وقت اپوزیشن مشل ترین دور سے گزر رہی ہے۔ایک جانبسابق وزیر اعظم نواز شریف العزیزیہ ریفرنس کیس میں سزا پانے کے بعد کوٹ لکھپت جیل میں موجود ہیں جبکہ صدر مسلم لیگ ن شہباز شریف بھی اس وقت اسی جیل میں موجود ہیں۔

دوسری جانب جعلی کیس نے پیپلز پارٹی کے لیے بھی مسائل کھڑے کر دئیے ہیں۔پیپلز پارٹی کی مرکزی قیادت بشمول آصف زرداری اور بلاول بھٹو مشکلات کا شکار ہیں۔اس وقت سیاسی پنڈتوں کا کہنا ہے کہ اپویشن کو متحد ہونے کی ضرورت ہے کیونکہ کہ اپویشن رہنماوں کو لگتا ہے کہ حکومت کی جانب سے انکو انتقامی کاروائیوں کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔ ایسی صورتحال میں مولانا فضل الرحمان ایک مرتبہ پھر تمام سیاسی قوتوں کو یکجا کرنے کے لیے مصروف عمل ہو چکے ہیں ۔ اس سلسلے میں انہوں نے آج سابق صدر آصف زرداری سے ملاقات کی ہے۔اس ملاقات میں انہوں نے سیاسی صورتحال کا جائزہ لیا جبکہ انکی جانب سے اپوزیشن رہنماوں کو انتقامی کاروائیوں کا نشانہ بنائے جانے پر تشویش کا اظہار بھی کیا گیا۔مولانا فضل الرحمان نے آصف زرداری پر زور دیا کہ وہ سابق وزیر اعظم نواز شریف سے ہاتھ ملا لیں۔انکا کہنا تھا کہ موجودہ صورتحال میں تمام گلےشکوے ختم کردینےچاہییں۔ انہوں نے سابق صدر کو مشورہ دیا کہ موجودہ صورتحال میں اپوزیشن کو مل بیٹھ کر حکمت عملی ترتب دینا چاہیے ہے۔

Advertisement

Source DailyAusaf
x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings