ڈالرکی اجارہ داری ختم!پاکستان ،چین ،روس نےمقامی کرنسی میں تجارت کرنے کا فیصلہ کرلیا

HomeLatest Updates

ڈالرکی اجارہ داری ختم!پاکستان ،چین ،روس نےمقامی کرنسی میں تجارت کرنے کا فیصلہ کرلیا

پاکستان ، چین ،روس کا ڈالر کی بجائے مقامی کرنسی میں تجارت کرنے کا فیصلہ ،تفصیلات کے مطابق چین ،روس اور پاکستان سمیت شنگھائی تعاون تنظیم کے 8رکن ممالک

”عورت کے موضوع پر بلاول ۔۔۔“ عورت مارچ کے معاملے پر شیخ رشید نے بھی لب کشائی کردی
کرونا سے بچائو اسلام کیا کہتا ہے ؟حضوراکرمؐ نے اللہ پاک سے اپنی امت کیلئے کونسی دعا مانگی تھی جو اللہ پاک نے قبول فرمائی تھی ؟ مولانا طارق جمیل کی خصوصی گفتگو
جس رات امریکہ نے قاسم سلیمانی کو ہلاک کیا، اُسی رات کون سا خوش نصیب جنرل امریکی حملے میں بچ گیا؟ انتہائی حیران کن انکشاف سامنے آگیا

پاکستان ، چین ،روس کا ڈالر کی بجائے مقامی کرنسی میں تجارت کرنے کا فیصلہ ،تفصیلات کے مطابق چین ،روس اور پاکستان سمیت شنگھائی تعاون تنظیم کے 8رکن ممالک نے ڈالر اور پاؤنڈ کی بجائے مقامی کرنسیوں میں باہمی تجارت، سرمایہ کاری اور بونڈ جاری کرنے کا اصولی فیصلہ کر لیا ہے۔18 مارچ کو ماسکو میں ہونے والی شنگھائی تعاون تنظیم کے وزرائے خزانہ کے اجلاس میں اس حوالے سے روڈ میپ طے کر کے دستخط کیے جائیں گے۔روس نے بطور چیئرمین ایس سی او تمام رکن ممالک سے مقامی کرنسیوں میں تجارت و سرمایہ کاری کے لیے

تجاویز طلب کر لی ہیں۔ان تجاویز کا ماسکو میں ہونے والے اجلاس میں تفصیلی جائزہ لینے کے بعد ایس سی او کے رکن ممالک کے لیے قومی کرنسیوں کی میوچل سیٹلمنٹ کا نظام متعارف کروایا جائے گا۔رکن ممالک کے درمیان قومی کرسیوں میں تجارت و سرمایہ کاری کے لیے طے پانے والے روڈ میپ پر تمام رکن ممالک دستخط کریں گےذرائع کے مطابق وزرائے خزانہ کی کانفرنس کے ایجنڈے کی روشنی میں پاکستان کی وزارت خزانہ نے بھی تیاری مکمل کر لی ہے۔اگر شنگھائی تعاون تنظیم کے رکن ممالک کے درمیان تجارت اور سرمایہ کاری ڈالر اور پاؤنڈ کی بجائے قومی کرنسیوں میں شروع ہو جاتی ہے اور یہ ایک اہم پیش رفت ہو گی۔اسی سے رکن ممالک کی قومی کرنسیاں بھی مضبوط ہوں گی اور باہمی تجارت اور سرمایہ کاری کو بھی فروغ ملے گا۔دستاویز میں مزید بتایا گیا ہے کہ ایس سی او کے رکن ممالک کے درمیان نیشنل کرنسیوں میں براہ راست تجارت کا طریقہ کار بھی واضع کیا جائے گا۔اسی طرح سرمایہ کاری تعاون ، ٹریڈ فنانسنگ اور ڈویلپمنٹ کے لیے معاونت بھی مقامی کرنسیوں میں کرنے کی تجویز زیر غور ہے۔،روس نے 18مارچ کو ماسکو میں طلب کیے گئے شنگھائی تعاون تنظیم کے رکن ممالک کے وزرائے خزانہ کے اجلاس کا ایجنڈا بھی جاری کر دیا ہے۔

COMMENTS

WORDPRESS: 0
DISQUS: 0