پاکستانیوں نے کرونا وائرس کوکمائی کا ذریعہ بنا لیا،لوٹ مار کی انتہا، جانتے ہیں ٹیسٹ کے عوض کتنی بھاری رقم وصول کی جانے لگی؟

HomeLatest Updates

پاکستانیوں نے کرونا وائرس کوکمائی کا ذریعہ بنا لیا،لوٹ مار کی انتہا، جانتے ہیں ٹیسٹ کے عوض کتنی بھاری رقم وصول کی جانے لگی؟

کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر لاہور کی بعض پرائیوٹ لیبارٹریز نے 7ہزار 900 روپے کے عوض ٹیسٹ کرنے کا سلسلہ جاری کر دیا ہے۔محکمہ صحت پنجاب کے مطابق سرک

یوکرائنی طیارہ تباہ، ایران نے ذمہ داروں کے خلاف نہایت بڑا قدم اٹھاتے ہوئے اعلان کر دیا
پاک فوج کی طرح ڈاکٹر اور پیرا میڈیکل سٹاف کی کرونا وائرس کے خلاف جنگ کسی جہاد سے کم نہیں، تحریک انصاف بھی کرونا وائرس کے خاتمے کیلئے میدان میں آگئی
ملک بھر کےعلماء مشائخ نے’عورت مارچ‘کےمنتظمین کو حیران کن دعوت دے دی،تفصیل جان کر ماروی سرمدبھی پریشان ہو جائیں گی

کورونا وائرس کے خطرے کے پیش نظر لاہور کی بعض پرائیوٹ لیبارٹریز نے 7ہزار 900 روپے کے عوض ٹیسٹ کرنے کا سلسلہ جاری کر دیا ہے۔محکمہ صحت پنجاب کے مطابق سرکاری اسپتالوں میں صرف مشتبہ مریضوں کے مفت ٹیسٹ کیے جارہے ہیں جبکہ پرائیوٹ لیبارٹریز میں 7ہزار 900 روپے کے عوض کورونا وائرس کے ٹیسٹ کیے جا رہے ہیں۔محکمہ صحت پنجاب کا کہنا ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں آئسولیشن وارڈ بنا دیئے گئے ہیں جہاں صرف مشتبہ کیسز کے کورونا ٹیسٹ کیے جارہے ہیں.محکمہ صحت پنجاب کے ترجمان کا کہنا ہے کہ اسپتال آنے والے مریضوں

میں کورونا ٹیسٹ کی علامات ظاہر ہونے پر چیک اپ کیا جاتا ہے، ڈی جی آفس سے مقررکردہ ڈاکٹر خود اسپتال جا کر مشتبہ مریض کے خون کے نمونے لیتا ہے جو اسلام آباد کی این آئی ایچ لیب میں بھیج دیئے جاتے ہیں۔ایم ایس میو اسپتال لاہور ڈاکٹر طاہر خلیل کے مطابق لاہور میں بعض پرائیوٹ لیبارٹریز میں کورونا ٹیسٹ کے لیے 7ہزار 900 روپے چارجز لیے جارہے ہیں۔

COMMENTS

WORDPRESS: 0
DISQUS: 0