Advertisement

چیف جسٹس نے اپنا وعدہ پورا کر دیا،کاش پاکستان کے ہر مظلوم کو اس طرح کاانصاف میسر آسکے:بسمہ امجد

Advertisements

سانحہ ماڈل ٹاؤن میں شہید ہونےوالی تنزیلہ امجد کی بیٹی بسمہ امجد نے کہا ہے کہ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے لاہور رجسٹری میں انصاف کی فراہمی کے حوالے سے میرے سر پر دست شفقت رکھتے ہوئے جو وعدہ کیا تھا وہ انہوں نے پورا کر دیا، میں اور شہدائے ماڈل ٹاؤن کے ورثاء ان کے شکر گزار ہیں، اپنی ریٹائرمنٹ سے قبل انصاف کی فراہمی کے حوالے سے آئین و قانون کے تحت وہ مظلوموں کی جو مدد کر سکتے تھے وہ انہوں نے کی ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بسمہ امجد کا کہنا تھا کہ چیف جسٹس نے میری طرف سے سادہ کاغذ پر لکھی گئی درخواست پر ایکشن لیا اور نئی جے آئی ٹی کی تشکیل کی راہ ہموار ہو سکی،کاش پاکستان کے ہر مظلوم کو اس طرح کاانصاف میسر آسکے،ہم حکومت کا بھی شکریہ ادا کرتے ہیں کہ انہوں نے سپریم کورٹ میں نئی جے آئی ٹی کی تشکیل کے حوالے سے جو یقین دہانی کروائی تھی اسے پورا کردیا۔بسمہ امجد نے کہا کہ ہمارے قائد ڈاکٹر محمد طاہرالقادری نے کارکنوں کے انصاف کی جنگ لڑنے کا حق ادا کر دیا، گزرے ہوئے ساڑھے 4سال کا ایک بھی دن ایسانہیں کہ انہوں نے ہمارا خیال نہ رکھا ہو، پوری تحریک نے ہمارا خیال رکھا، میں دعویٰ سے یہ کہہ سکتی ہوں کہ پاکستان میں نہ کوئی جماعت ایسی ہو گی اور نہ کوئی قائد ایسا ہو گا جو اپنے غریب کارکنوں کے شانہ بشانہ کھڑا ہوا ہو۔بسمہ امجد نے کہا کہ میرے قائد ڈاکٹر طاہرالقادری خود عدالت میں پیش ہوئے،

گزشتہ 7ماہ سے انہوں نے اپنی تمام بین الاقوامی تنظیمی مصروفیات کو معطل کررکھا ہے اور آج ان کی جدوجہد رنگ لائی ہے، شہدائے ماڈل ٹاؤن کے ورثاء کا ایک ہی مطالبہ تھا کہ سانحہ کی غیر جانبدار تفتیش کی جائے کیونکہ سابق حکمران جو اس سانحہ کے ماسٹر مائنڈ اور براہ راست ملوث تھے، انہوں نے مرضی کی جے آئی ٹی بناکر مرضی کے رزلٹ لیے، ان جے آئی ٹیز میں زخمیوں اور چشم دید گواہان کے بیانات سرے سے ریکارڈ ہی نہیں کیے گئے تھے، اس طرح انسانیت کے قتل عام کے بعد ان ظالم حکمرانوں نے انصاف کابھی قتل عام کیا۔انہوں نے کہا کہ ہمارا ایمان ہے کہ ظالم اس دنیا میں بھی رسوا ہوں گے اور آخرت میں بھی رسوائی ان کا مقدر بنے گی۔

Advertisement

Source DailyPakistan.com.pk
x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings