Advertisement

زیادہ پسینہ خارج ہونے سے موت بھی واقع ہو سکتی ہے ، ماہرین نے خبردار کر دیا

Advertisements

 گرمی کی موجودہ لہر کو پیش نظر رکھتے ہوئے شہریوں کو تیز دھوپ اور سخت موسم میں ہیٹ سٹروک سے بچاؤ کیلئے مناسب حفاظتی تدابیر اختیار کرنے کو یقینی بنانا چاہیے اور ننگے سر تیز دھوپ میں نکلنے سے پرہیز کرنا چاہیے ،لاہور جنرل ہسپتال کے ایسوسی ایٹ پروفیسر آف میڈیسن ڈاکٹر اسرار الحق طور نے لوگوں کی آگاہی کیلئے بتایا ہے کہ تیزدھوپ اورگرمی کے باعث جسم پر آنے والا پسینہ اگر حد سے بڑھ جائےتو جسم میں پانی کی کمی ہو جاتی ہے

اس سے ہیٹ سٹروک میں مبتلا ہونے کے باعث گردے ، دماغ اور دل بلا واسطہ طور پر متاثر ہوتے ہیں جس سے بعض حالات میں موت بھی واقع ہو سکتی ہے۔انہوں نے ہیٹ سٹروک کی علامات بتاتے ہوئے کہا کہ بخار ،متلی ،الٹی ، سر درد،چکر،غنودگی ، بے ہوشی او ر جھٹکے ظاہر ہو سکتے ہیں۔ڈاکٹر اسرار الحق طور نے ہیٹ سٹروک سے بچاؤ کیلئے پانی اور دیگر مشروبات کے زیادہ استعمال کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ نمکول ،لیموں پانی اور لسی جیسے محلول استعمال کریں ،اسی طرح غیر ضروری طور پر دھوپ میں نکلنے سے پرہیز کریں اگر ضروری کام سے جانا بھی ہوتو کام کے دوران وقفہ کر کے سایہ دار اور ہوا دار جگہ پر آرام کریں ،ڈاکٹر اسرار الحق طور نے مزید کہا کہ شہریوں کو ہیٹ سٹروک کی شکل میں فوری طور پر ہسپتال اور ڈاکٹر سے رجو ع کرنا چاہیے اور غیر ضروری التوا کا شکار نہیں ہونا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ مردوں کے علاوہ بچوں اور خواتین کو بھی ہیٹ سٹروک کے بارے میں ایسے ہی خبردار رہنا چاہیے اور کسی بھی قسم کی غفلت کا مظاہرہ نہیں کرناچاہیے۔انہوں نے کہا کہ کہ باہر نکلنے وقت بڑے اور لمبی آستینوں والے کپڑے کا استعمال کریں اور ذیادہ سے ذیادہ پانی پئیں۔

Advertisement

Source daily ausaf

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings