Advertisement

اپنی بہن کو نیکٹا میں تعیناتی کیلئے سفارشی خط لکھنا زرتاج گُل کو مہنگا پڑ گیا

Advertisements

 شبنم گل کی نیکٹا میں تعیناتی کے بعد زرتاج گل کے لیے مشکل کھڑی ہو گئی۔میڈیا رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ رکن پنجاب اسمبلی حنا پرویز بٹ نے زرتاج گل کے خلاف ریفرنس دائر کر دیا ہے۔اور زرتاج گل اسمبلی رکنیت ختم کرنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔۔یاد رہے کہ یکم جون کو زرتاج گل وزیر کی اسسٹنٹ پروفیسر بہن شبنم گل کو ڈائریکٹر نیکٹا تعینات کرنے متعلق خبریں منظر عام پر آئی تھیں۔ جس کے بعد وزیراعظم عمران خان نے معاملے پر ناراضگی کا اظہار کیا تھا۔

وزیر اعظم عمران خان نے زرتاج گل کی بہن کی نیکٹا کے ڈائریکٹر کے عہدے پر تعیناتی کے معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے زرتاج گل کو نیکٹا کو لکھے گئے خط سے دست بردار ہونے کی ہدایت کی تھی۔وزیراعظم عمران خان نے وفاقی کابینہ کے اجلاس میں زرتاج گل سے اظہارناراضگی کیا، زرتاج گل نے بات کرنے کیلئے ہاتھ کھڑا کیا تو وزیراعظم نے روک دیا، زرتاج گل آپ کوایسا نہیں کرنا چاہیے تھا۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیراعظم عمران خان نے وفاقی کابینہ کے اجلاس میں وزیرمملکت زرتاج گل کی کلاس لے لی۔ انہوں نے ہدایت کرتے ہوئے کہ وزراء اختیارات کا ناجائز استعمال نہ کریں۔ سفارش کلچر ہماری حکومت کا رواج نہیں۔ زرتاج گل نے بات کرنے کیلئے

ہاتھ کھڑا کیا تو وزیراعظم نے روک دیا، زرتاج گل آپ کوایسا نہیں کرنا چاہیے تھا۔ بعد ازاں مسلم لیگ ن نے وفاقی وزیر برائے موسمیات زرتاج گل کی نااہلی کے لیے الیکشن کمیشن سے رجوع بھی کیا تھا۔درخواست مسلم لیگ ن کی رکن صوبائی اسمبلی حنا پرویز بٹ کی جانب سے دائر کی گئی جس میں کہا گیا تھا کہ وفاقی وزیر نے اپنی بہن کو نیکٹا میں تعینات کروانے کے لیے اثر و رسوخ استعمال کیا۔ زرتاج گل نے جھوٹ بولا کہ ان کی بہن میرٹ پر پورا اُترتی ہیں لہٰذا زرتاج گل کو اثر و رسوخ استعمال کرنے اور اختیارات کا ناجائز استعمال کرنے پر نااہل قرار دیا جائے۔

Advertisement

Source daily ausaf

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings