’حکومت آئی ایم ایف کے پاس دوبارہ جائے اور ان سے ۔۔۔‘بلاول بھٹو نے نیامطالبہ کردیا

6

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے کہا ہے کہ حکومت آئی ایم ایف کے پاس دوبارہ جائے اور ان سے شرائط پردوبارہ مذاکرات کرے۔ہر فورم پر کہا کہ آئی ایم ایف عوام کا معاشی قتل ہے۔پی ٹی آئی اور آئی ایم ایف کے معاہدے کو کسی صورت نہیں مان سکتے۔ اسلام آبادمیں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو نے کہا کہ پی ٹی آئی ایم ایف کے معاہدے کو پھاڑکر باہر پھینک دیں۔ہم نے بھی قرض لیا کہ لیکن ہم پاکستان اور عوام کی بات کو سامنے رکھتے تھے،شرائط رکھی جاتی تھیں لیکن ہم عوام کے تحفظ کی بات کرتے تھے۔

انہوں نے کہاپندرہ ماہ بعد ہر پاکستانی کو یقین ہے کہ معاشی استحکام ان کے بس کی بات نہیں ہے۔ انہوںنے کہاحکومت آئی ایم ایف کے پاس دوبارہ جاکر مذاکرات کرے اور ان سے شرائط و ضوابط پر نئے سرے سے مذاکرات کرے، بلاول نے کہا کہ افسوس کی بات یہ ہے کہ حکومت حقائق پر بات نہیں کرتی۔ہم جانتے ہیں کہ نالائق حکومت ہے معاہدہ نہیں کرسکتا۔انہوں نے کہاپندرہ ماہ میں پہلی بار مشیر خزانہ پارلیمان میں آئے ہم نے مہنگائی پر بات کی تو ہمیں گالیاں دی گئیں۔ انہوں نے کہا کہ حکومتی اعدادوشمار خود بتاتے ہیں کہ جتنی مہنگائی ان کے دور میں ہوئی ہے اتنی کبھی نہیں ہوئی۔