Advertisement

پہلے ٹیسٹ میں پاکستانی باؤلرز کا جادو چل گیا!! نیوزی لینڈ کی پوری ٹیم صرف کتنے رنز پر ڈھیر کر ڈالی ؟ جانئے

Advertisements

تین ٹیسٹ میچز کی سیریز کے پہلے مقابلے کے پہلے روزچائے کے وقفے پر نیوزی لینڈ کی پوری ٹیم پاکستان کے خلاف محض153رنز بناکر آل آﺅٹ ہوگئی ہے ۔ ابوظہبی کے شیخ زید سٹیڈیم میں کیویز کپتان کین ولیمسن نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا جبکہ قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے کہا کہ اگر وہ بھی ٹاس جیتتے تو بیٹنگ ہی کرتے۔

نیوزی لینڈ کی جانب سے ٹام لیتھم اور جیت راول نے اننگز کا آغاز کیا تو 20 کے مجموعی سکور پر قومی ٹیم کو پہلی کامیابی ملی جب جیت راول 7 رنز بنانے کے بعد محمد عباس کی گیند پر وکٹ کے پیچھے کیچ آﺅٹ ہوئے۔اوپننگ بلے باز ٹام لیتھم بھی زیادہ دیر کریز پر نہ رک سکے اور 13 رنز کے مہمان ثابت ہوئے جب کہ روس ٹیلر 2رنز بناسکے، دونوں بلے باز یاسر شاہ کا شکار بنے۔
کین ولیمسن اور ہنری نکولس نے چوتھی وکٹ کے لیے72رنز جوڑے جس کے بعد نکولس 28رنز بنا کر محمد عباس کی دوسری وکٹ بنے ، کپتان ولیمسن 63رنز کی عمدہ باری کھیلنے کے بعد حسن علی کی گیند پر پل شاٹ کھیلتے ہوئے وکٹوں کے پیچھے جکڑے گئے ، کولن ڈی گرینڈ ہوم اگلی ہی گیند پر ایل بی ڈبلیو ہوئے تاہم اش سوڈھی نے حسن علی کو ہیٹرک سے محروم رکھا ، سوڈھی 4رنز بنا کر حارث سہیل کی پہلی وکٹ بنے جنہوں نے بی جے واٹلنگ کو آﺅٹ کرکے اپنی دوسری وکٹ حاصل کی ،بلال آصف نے نیل ویگنر کو آﺅٹ کرکے اپنی پہلی وکٹ لی جس کے بعد یاسر شاہ نے اعجاز پٹیل کو آﺅٹ کرکے اپنی تیسری وکٹ لی ۔

قومی ٹیم امام الحق، محمد حفیظ، اظہرعلی، حارث سہیل، بابراعظم، اسد شفیق، کپتان سرفراز احمد، حسن علی، بلال آصف، محمد عباس اور یاسر شاہ پر مشتمل ہے۔نیوزی لینڈ کے کپتان کین ولیمسن گروئن انجری سے صحت یاب ہو کر اپنی ٹیم کی قیادت کر رہے ہیں جب کہ اعجاز پٹیل اپنا ڈیبیو میچ کھیل رہے ہیں۔کیویز ٹیم جیت راول، ٹام لیتھم، کین ولیمسن(کپتان )، روس ٹیلر، ہینری نکولس، کولن ڈی گرینڈہوم،بے جے واٹلنگ(وکٹ کیپر) نیل واگنر، اعجاز پٹیل، ٹرینٹ بولٹ اور اش سودھی پر مشتمل ہے۔

پاکستان کو نیوزی لینڈ کے خلاف آٹھ سال بعد پہلی ٹیسٹ سیریز کی جیت کا انتظار ہے، 2011 ءمیں پاکستان نے نیوزی لینڈ کو ایک صفر سے شکست دی تھی اور دونوں ٹیموں کے درمیان چار سال پہلے امارات میں ہونے والی ٹیسٹ سیریز ایک ،ایک سے برابر رہی تھی۔ دونوں ملکوں کے درمیان اب تک 55 ٹیسٹ میچز ہوئے ہیں جن میں سے پاکستان نے 24 اور نیوزی لینڈ نے 10 جیتے جبکہ 21 میچ ڈرا رہے۔کیوی کپتان کین ولیمسن کا کہنا ہے کہ ہماری ٹیم اس فارمیٹ میں نا تجربہ کار ہے، ہمیں سب سے زیادہ خطرہ عباس اور یاسر شاہ کی باﺅلنگ سے ہے۔

Advertisement

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings