Advertisement

پہلی مرتبہ پاک فوج کو سرکاری ٹی وی چینل پی ٹی وی کا باقاعدہ حصہ بنا دیا گیا

Advertisements

پہلی مرتبہ پاک فوج کو سرکاری ٹی وی چینل پی ٹی وی کا باقاعدہ حصہ بنا دیا گیا، وفاقی حکومت نے پی ٹی وی کیلئے 8 رکنی بورڈ آف گورنرز تشکیل دے دیا، ڈی جی آئی ایس پی آر بھی حصہ ہوں گے۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیراطلاعات فواد چودھری نے وفاقی کابینہ کے اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ اجلاس میں بیگم کلثوم نوازکیلئے دعائے مغفرت کی گئی۔

فواد چوہدری نے بتایا کہ پی ٹی وی کے بورڈ آف گورنرزکی منظوری دی گئی ہے ۔ بورڈ آف گورنرزکے چیئرمین کووزیرکی حیثیت حاصل ہوگی۔ پی ٹی وی بورڈ کے 8 ارکان ہوں گے۔ پی ٹی وی کے بورڈز آف گورنرز میں پہلی مرتبہ پاک فوج کو بھی شامل کیا گیا ہے۔ پی ٹی وی کے بورڈ آف گورنز میں ڈی جی آئی ایس پی آر بھی رکن ہوں گے۔
انہوں نے مزید کہا کہ گیس کی کمی سے یوریا کھاد کی پیداوار رک گئی ہے۔

کھاد کی کمی کوپورا کرنے کیلئے ایک لاکھ ٹن یوریا کھاد ہمیں درآمد کرنی پڑے گی۔15ستمبر تک اپنے پلانٹس کوپوری گیس فراہم کی جائے گی تاکہ کمی پوری کی جاسکے۔ انہوں نے کہا کہ اورنج لائن بس لاہور کی 30ارب روپے میں مکمل ہوئی۔۔کرایہ حکومت 91 کروڑ روپیہ ملتا ہے، جبکہ خرچ 4.2ارب روپے ہے جو کہ حکومتی سبسڈی دی جاتی ہے۔ راولپنڈی اسلام آباد 45 ارب روپے میں مکمل ہوئی۔
کل کرایہ 66 کروڑ اور سالانہ 2ارب روپے سبسڈی دی جاتی ہے تاکہ یہ چلتی رہی۔میٹروملتان کا کل کرایہ 5کروڑ روپے اور سبسڈی 2.1 بلین روپے ہے۔اس وقت حکومت پنجاب کو 8 ارب روپیہ سالانہ ان تینوں میٹروپرخرچ کرنا پڑتا ہے۔ایسے ملک میں جہاں پینے کا پانی نہیں ہے، پشاور پراجیکٹ 66 ارب میں مکمل ہوگا۔۔پشاور اور پنجاب میں فرق یہ ہے کہ پشاور والوں نے اپنی بسیں خریدی ہیں۔
اورنج ٹرین کا پراجیکٹ 250 ارب روپے میں پہنچ گیا ہے۔اگر ہم چاہتے تھے توخیبرسے کراچی تک ڈبل ٹریک کرسکتے تھے۔

اگر یہ پراجیکٹ مکمل ہوگیا توہمیں اس پربھی ساڑھے 3 ارب سبسڈی دینی ہوگی۔اجلاس میں میٹروبسوں کے آڈٹ کا فیصلہ بھی کیا گیا ہے۔ وفاقی کابینہ نے وزارت کیڈ کوختم کرنے کی منظوری بھی دے دی ہے۔جبکہ ڈیمز فنڈ کوٹیکس سے مستثنیٰ کردیا جائے گا۔

Advertisement

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings