Advertisement

وزیراعظم کا دورہ سعودی عرب کے بعد ایک اور خلیجی ملک کے فوری دورے کا فیصلہ

Advertisements

وزیراعظم کا سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات کا بھی دورہ کرنے کا فیصلہ، عمران خان 2 روزہ دورہ سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات کے ولی عہد کی دعوت پر خلیجی ملک کا دورہ بھی کریں گے۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان منگل کے روز کو اپنے پہلے غیر ملکی سرکاری دورے پر سعودی عرب روانہ ہوں گے۔پارلیمنٹ ہاؤس میں نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان منگل

کے روز سعودی عرب روانہ ہوں گے اور اگلے ہی روز واپس آجائیں گے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ وزیراعظم کودورہ سعودی عرب کی دعوت دی گئی ہے جہاں ان کی سعودی حکام سے ملاقات ہوگی۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب کے ساتھ ہمارے دیرینہ تعلقات ہیں، ان میں مزید گہرائی پیدا کرنی ہے اور ایک فاصلہ پیدا ہو گیا تھا جو مٹائیں گے۔دوسری جانب ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان سعودی عرب کے دورے میں عمرہ بھی ادا کریں گے اور روضہ رسول اللہﷺ پر حاضری بھی دیں گے۔ جبکہ اب حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ وزیراعظم سعودی عرب کے دورے کے بعد متحدہ عرب امارات کا دورہ بھی کریں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب کے 2 روزہ دورے کے بعد متحدہ عرب امارات جائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد کی دعوت پر سعودی عرب کے پڑوسی ملک کا دورہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔دورے کے دوران دونوں ممالک کی قیادت کے درمیان اہم معاملات زیر غور آئیں گے۔ دونوں ممالک کے دورے کے دوران پاکستان کو بڑی مالی مدد ملنے کا امکان ہے۔ ذرائع کے مطابق سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کی جانب سے پاکستان کو آئی ایم ایف کے چنگل میں مزید پھنسنے سے بچانے کیلئے نرم شرائط پر قرضہ دیے جانے کی پیش کش کی جائے گی۔ عمران خان 2 روزہ دورہ سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات کے ولی عہد کی دعوت پر خلیجی ملک کا دورہ بھی کریں گے

وزیراعظم کا سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات کا بھی دورہ کرنے کا فیصلہ، عمران خان 2 روزہ دورہ سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات کے ولی عہد کی دعوت پر خلیجی ملک کا دورہ بھی کریں گے۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان منگل کے روز کو اپنے پہلے غیر ملکی سرکاری دورے پر سعودی عرب روانہ ہوں گے۔پارلیمنٹ ہاؤس میں نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان منگل کے روز سعودی عرب روانہ ہوں گے اور اگلے ہی روز واپس آجائیں گے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ وزیراعظم کودورہ سعودی عرب کی دعوت دی گئی ہے جہاں ان کی سعودی حکام سے ملاقات ہوگی۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب کے ساتھ ہمارے دیرینہ تعلقات ہیں، ان میں مزید گہرائی پیدا کرنی ہے اور ایک فاصلہ پیدا ہو گیا تھا جو مٹائیں گے۔دوسری جانب ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان سعودی عرب کے دورے میں عمرہ بھی ادا کریں گے اور روضہ رسول اللہﷺ پر حاضری بھی دیں گے۔ جبکہ اب حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ وزیراعظم سعودی عرب کے دورے کے بعد متحدہ عرب امارات کا دورہ بھی کریں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب کے 2 روزہ دورے کے بعد متحدہ عرب امارات جائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد کی دعوت پر سعودی عرب کے پڑوسی ملک کا دورہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔دورے کے دوران دونوں ممالک کی قیادت کے درمیان اہم معاملات زیر غور آئیں گے۔ دونوں ممالک کے دورے کے دوران پاکستان کو بڑی مالی مدد ملنے کا امکان ہے۔ ذرائع کے مطابق سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کی جانب سے پاکستان کو آئی ایم ایف کے چنگل میں مزید پھنسنے سے بچانے کیلئے نرم شرائط پر قرضہ دیے جانے کی پیش کش کی جائے گی۔

وزیراعظم کا سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات کا بھی دورہ کرنے کا فیصلہ، عمران خان 2 روزہ دورہ سعودی عرب کے بعد متحدہ عرب امارات کے ولی عہد کی دعوت پر خلیجی ملک کا دورہ بھی کریں گے۔ تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان منگل کے روز کو اپنے پہلے غیر ملکی سرکاری دورے پر سعودی عرب روانہ ہوں گے۔پارلیمنٹ ہاؤس میں نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے بتایا کہ وزیراعظم عمران خان منگل کے روز سعودی عرب روانہ ہوں گے اور اگلے ہی روز واپس آجائیں گے۔ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ وزیراعظم کودورہ سعودی عرب کی دعوت دی گئی ہے جہاں ان کی سعودی حکام سے ملاقات ہوگی۔ وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب کے ساتھ ہمارے دیرینہ تعلقات ہیں، ان میں مزید گہرائی پیدا کرنی ہے اور ایک فاصلہ پیدا ہو گیا تھا جو مٹائیں گے۔دوسری جانب ذرائع کے مطابق وزیراعظم عمران خان سعودی عرب کے دورے میں عمرہ بھی ادا کریں گے اور روضہ رسول اللہﷺ پر حاضری بھی دیں گے۔ جبکہ اب حکومت کی جانب سے اعلان کیا گیا ہے کہ وزیراعظم سعودی عرب کے دورے کے بعد متحدہ عرب امارات کا دورہ بھی کریں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب کے 2 روزہ دورے کے بعد متحدہ عرب امارات جائیں گے۔ وزیراعظم عمران خان نے متحدہ عرب امارات کے ولی عہد کی دعوت پر سعودی عرب کے پڑوسی ملک کا دورہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔دورے کے دوران دونوں ممالک کی قیادت کے درمیان اہم معاملات زیر غور آئیں گے۔ دونوں ممالک کے دورے کے دوران پاکستان کو بڑی مالی مدد ملنے کا امکان ہے۔ ذرائع کے مطابق سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات کی جانب سے پاکستان کو آئی ایم ایف کے چنگل میں مزید پھنسنے سے بچانے کیلئے نرم شرائط پر قرضہ دیے جانے کی پیش کش کی جائے گی۔

Advertisement

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings