Advertisement

ورلڈکپ میں پاکستان اور بھارت کے درمیان میچ نہیں بلکہ جنگ ہوگی،سہواگ جوش میں آکر بہت کچھ کہہ گئے

Advertisements

بھارتی ٹیم کے سابق ٹیسٹ بلے باز وریندر سہواگ کا کہنا ہے کہ ورلڈکپ میں پاکستان اور بھارت کے درمیان میچ نہیں بلکہ جنگ ہوگی۔ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے بھارت کے سابق اوپننگ بلے باز وریندر سہواگ نے کہا کہ ورلڈکپ 2019 میں 16 جون کو مانچسٹر کے میدان میں پاکستان اور بھارت کے درمیان میچ ہوگا، دراصل یہ میچ نہیں بلکہ جنگ ہے اور ہمیں ہر حال میں پاکستان کو ہرانا ہوگا۔

پلوامہ حملے کے بعد بھارت کے متعدد سابق کرکٹرز اور دیگر لوگوں نے بھارتی کرکٹ بورڈ کو مشورہ دیا ہے کہ وہ ورلڈکپ میں پاکستان کے میچ کا بائیکاٹ کردیں اور وریندر سہواگ بھی انہی میں سے ایک ہیں جو اس بات کی حمایت کرتے دکھائی دیتے ہیں، ان کا کہنا تھا کہ اگر پاکستان سے میچ نہ بھی ہوا تو کوئی فرق نہیں پڑتا تاہم ہمیں ملک کے بہتر مفاد میں سوچتے ہوئے فیصلہ لینا چاہیے۔

بھارتی وکٹ کیپر اور چنئی سپر کنگ کے کپتان مہندرا سنگھ دھونی کو امپائر کے فیصلے کے خلاف غصہ کرنے پر شدید تنقید کا سامنا کر نا پڑا۔ایم ایس دھونی راجستھان رائلز کے خلاف میچ کے آخری اوور میں بین اسٹوک کی ایک گیند کو امپائر الہاس گاندھے نے فوری نو بال قرار دیا تاہم لیگ امپائر آکسنفورڈ نے اصل فیصلے کو کالعدم کردیا، جس پر دھونی غصہ میں آگئے۔ اور میدان میں آکر امپائرز سے بحث شروع کردی۔بالآخر نو بال تو نہیں دی گئی لیکن سینٹنر نے آخری بال پر چھکا لگا کر ٹیم کو جیت دلادی تاہم کپتان دھونی کے اس عمل پر آئی پی ایل انتظامیہ نے ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی کا مرتکب قرار دیتے ہوئے میچ فیس کا50فیصد جرمانہ عائد کردیا۔سوشل میڈیا پر بھی شائقین کرکٹ نے دھونی کے رویہ پر ناپسندیدگی کا اظہار کیا اور ان پر شدید تنقید کی۔

Advertisement

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings