Advertisement

ننھی زینب کے بعد ایک اور 5 سالہ بچی کی لاش برآمد، پورے ملک میں ہنگامہ بھرپا ہوگیا

Advertisements

قصور میں درندہ صفت شخص نے معصوم کلی زینب کو بد فعلی کا نشانہ بنانے کے بعد اسے قتل کر دیا جس نے تمام پاکستانیوں کی روحوں کو ہلا کر رکھ دیا

ہے ابھی یہ زخم تازہ تھا کہ ایک اور انتہائی افسوسنا ک خبر سننے کو مل گئی ہے ،ٹویٹر صارف نے پیغام جاری کرتے ہوئے کہاہے کہ پشاور میں بھی ایک پانچ سالہ معصوم بچی کی لاش ملی ہے ۔تفصیلات کے مطابق لقمان خان ترکئی نامی ٹویٹر صارف نے پیغام جاری کرتے ہوئے بتایا کہ ”یہاں صرف زینب نہیں بلکہ پشاور کے تھانہ خزانہ کی حدود سے بھی ایک پانچ سالہ نامعلوم بچی کی لاش ملی ہے جسے شناخت کیلئے ایدھی سینٹر منتقل کر دیا گیاہے “ ۔واضح رہے کہ قصور میں کمسن بچی کے اغوائ کے بعد زیادتی اور قتل کے واقعے نے پوری انسانیت ے دلوں کو دہلا دیا۔مقتولہ زینب کے والدین وقوعے کے وقت عمرے کی ادائیگی کے لیے سعودی عرب گئے ہوئے تھے جہاں سے وہ پی آئی اے کی پرواز پی کے 653پر اسلا م آباد سے لاہور پہنچ گئے ۔اس موقع پر زینب کے والد نے اپنی مظلومہ بیٹی کے قتل پر میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے رشتہ داروں کے ساتھ پولیس نے تعاون نہیں کیا۔ پولیس والے آتے تھے اور چائے پی کر چلے جاتے تھے۔ان کا کہنا تھا کہ ساری سکیورٹی جاتی امرا پر مامور ہے ۔ہم عام لوگ کیڑے مکوڑے ہیں۔ انھوں نے کہا کہ اس وقت تک زینب کی تدفین نہیں کریں گے جب تک

انصاف نہیں مل جاتا ۔ زینب کی والدہ کا کہناتھا کہ ہمیں انصاف کےعلاوہ اور کچھ بھی نہیں چاہیے۔واضح رہے کہ پنجاب کے شہر قصور میں مبینہ زیادتی کے بعد 8 سالہ بچی کے قتل کے واقعے پر پورا شہر سراپا احتجاج ہے اور مظاہرین کو منتشر کرنے کے لیے پولیس کی فائرنگ سے 2 افراد جاں بحق ہوچکے ہیں، حالات کشید ہ ہونے کی وجہ سے شہر میں رینجرز طلب کرلی گئی ہے ، معصوم کلی کی نماز جنازہ بھی ادا کردی گئی جبکہ بچی کے والدین نے انصاف کے حصول تک تدفین سے انکار کردیا ہے، پنجاب حکومت کے مطابق انہوں نے ملزمان کا سراغ لگا لیا ہے جبکہ پولیس نے مبینہ ملزم کا خاکہ بھی جاری کردیا ہے، آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے بھی واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور بچی کے والدین کو انصاف دلانے کے لئے سول انتظامیہ سے تعاون کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے۔ پنجاب حکومت کے مطابق انہوں نے ملزمان کا سراغ لگا لیا ہے جبکہ پولیس نے مبینہ ملزم کا خاکہ بھی جاری کردیا ہے، آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے بھی واقعے کی شدید الفاظ میں مذمت کی اور بچی کے والدین کو انصاف دلانے کے لئے سول انتظامیہ سے تعاون کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے۔

Advertisement