Advertisement

”شہباز شریف پور ی تنخواہ عطیہ کرتے تھے“لندن میں 6گھروں کے ذرائع کیا ہیں ؟ وزیر اعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب کا حیرت انگیز انکشاف

Advertisements

نجی ٹی وی کے ایک پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ شہباز شریف لندن کے 6گھروں کے ذرائع بتانے سے گریزاں ہیں ۔ شہزاد اکبر کا مزید کہنا تھا کہ شہباز شریف پوری تنخواہ عطیہ کرتے تھے ، اب وہ اپنے اثاثوں سے متعلق قوم کو بتائیں ۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ 2007میں اومنی گروپ کے پاس صرف تین کمپنیاں تھیں جو کہ 2018میں تجاوز کر کے تعداد میں 90ہو گئیں ہیں ۔ اسی طرح شہباز سلمان کے اثاثے 2013میں صر ف21ہزار تھے جو اب 3ارب روپے سے زائد ہو گئے ہیں ۔ وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ شہباز شریف ، حمزہ شہباز اور سلمان شہباز شریف کے اثاثوں کی وجہ ترسیلات زر ہیں جبکہ شہباز شریف لند ن میں اپنے 6گھروں سے متعلق ان کے ذرائع بتانے سے مکمل طور پر قاصر ہیں ۔

امیر جے یو آئی (ف) مولانا فضل الرحمٰن نے ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ عالمی طاقتوں کی سازش اور گریٹ گیم ہوتی ہے جس کے نتیجے میں کسی بھی ملک میں مارشل لا لگایا جاتا اور اپنے مفادات حاصل کیے جاتے ہیں۔ کسی بھی فوجی آمر کو ملک پر قبضہ کرنے کے لیے باقاعدہ فضا پیدا کی جاتی اور اس کے لیے ماحول پیدا کیا جاتا ہے تاکہ عوام اسے ویلکم کریں اور پھر وہ اس فوجی آمر سے وہ کام لیں جو کسی جمہوری حکمران سے نہیں لیے جا سکتے۔یہی وجہ ہے کہ جنرل ایوب خان کو ملک پر مسلط کر کے پاکستان کے تین دریا بیچ دیے گئے،جبکہ یحییٰ خان کو ملک پر نافذ کر کے ملک کو دولخت کرا دیا گیااور جب امریکہ نے افغانستان میں گھسنے کا پلان بنا لیا تھا تو اس گریٹ گیم کے لیے جنرل ضیا الحق کو استعمال کیا گیااور جب دہشت گرد کی آڑ میں کچھ اور حاصل کرنا تھا تو اس کام کے لیے جنرل مشرف سے بڑھ کر عالمی طاقتوں کو اور کوئی بندہ موزوں نظر نہیں آیا۔

Advertisement

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept Read More

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings