Advertisement

سعودی عرب کے ویزا کی فیس میں کمی کے حوالے سے پاکستانیوں کیلئے بڑی خوشخبری

Advertisements

پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان نے سعودی عرب کے اپنے حالیہ دورے کے دوران جدہ کے شاہ فیصل پیلس میں پاکستانی کمیونٹی سے خطاب کے دوران اُنہیں یقین دہانی کرائی ہے کہ سعودی اعلیٰ قیادت سے پاکستانیوں کے لیے وِزٹ ویزہ فیس میں کمی کرنے کا معاملہ بھی اُٹھایا جائے گا۔ اس بارے میں متعلقہ وزارت کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ اس معاملے کے حوالے سے فوری طور پر تجاویز اور حل پیش کریں۔

واضح رہے کہ سعودی عرب نے رواں سال مئی کے مہینے میں ہندوستان اور بعض عرب ممالک کے لیے وزٹ ویزہ فیس دو ہزار ریال سے گھٹا کر 305 ریال کر دی جبکہ پاکستان کے لیے اس فیس میں کوئی کمی نہیں لائی گئی، اور یہ بدستور 2 ہزار ریال پر ہی ٹھہری ہوئی ہے۔ پاکستانی سفیر نے بھی اس موقع پر بتایا کہ ویزہ فیس گھٹانے کے حوالے سے متعلقہ حکام سے بات چیت جاری ہے اورعنقریب جلد کوئی مثبت پیش رفت سامنے آ جائے گی۔سعودی عرب کی جانب سے بھارت کو سیاحت ویزہ کے لیے فیس میں دی جانے والی بڑی رعایت کے باعث اس سال بڑی تعداد میں بھارت سے عمرہ زائرین سعودی مملکت کا رُخ کر رہے ہیں۔ واضح رہے کہ سعودی حکومت نے 2020ء تک سیاحت کے شعبے میں 35 ارب پاؤنڈ کی سرمایہ کاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ عبدالعزیز وزان کے مطابق رواں سال کے دوران 30 دِن کا عمرہ پیکیج لینے والوں پر خصوصی کرم نوازی کی گئی ہے جس کے تحت وہ مملکت کے کسی بھی شہر،تاریخی اور سیاحتی مقام کی سیر بھی کر سکیں گے۔وژن 2030ء کے مطابق خارجی معتمرین کی گنتی ڈیڑھ کروڑ سے بڑھا کر 2030ء تک بتدریج 3 کروڑ تک پہنچائی جائے گی۔ جبکہ ہر سال حاجیوں کی گنتی میں بھی اضافہ کیا جائے گا اور 2030ء تک حاجیوں کی گنتی ساڑھے چار کروڑ تک بڑھا دی جائے گی۔ رواں سال حج کے دوران دُنیا کے مختلف کونوں سے70لاکھ افراد ارضِ مقدس پر عمرہ کی غرض سے تشریف لائے۔

نائب وزیر حج و عمرہ عبدالفتاح مشاط کے مطابق آئندہ سے ایئر پورٹس پر معتمرین کی امیگریشن کارروائی 30 سے 40 منٹس کی بجائے چند منٹس میں مکمل کر لی جائے گی۔ اس حوالے سے مطلوبہ تیاریاں کر لی گئی ہیں۔ سعودی مملکت چاہتی ہے کہ ہر سال حاجیوں کی تعداد بڑھا کر اُن افراد کے لیے امکان کو بڑھا دیا جائے ‘ جو ابھی تک حج کی سعادت سے محروم ہیں۔

Advertisement

x

We use cookies to give you the best online experience. By agreeing you accept the use of cookies in accordance with our cookie policy.

I accept I decline Privacy Center Privacy Settings